بلدیاتی انتخابات ترجیح ایک سال میں اقتدار کو نچلی سطح پر منتقل کرینگے عبدالقیوم نیازی

اسلام آباد(اے ایف بی) وزیراعظم آزاد حکومت ریاست جموں و کشمیر سردار عبدالقیوم نیازی نے کہا ہے کہ صحافت ریاست کا چوتھا اور اہم ترین ستون ہے، صحافتی شعبہ کی ترقی کے لیے اقدامات اٹھائیں گے، آزاد کشمیر تحریک آزادی کا بیس کیمپ ہے لیکن افسوس کہ اسے اقتدار کا ریس کیمپ بنا دیا گیا، عمران خان کے ویژن کے مطابق آزاد خطے میں گڈ گورننس اور تحریک آزادی کو فروغ دے کر آر پار پیغام دینگے کہ مظفرآباد حقیقی معنوں میں تحریک کا بیس کیمپ ہے۔ ٹوٹی نلکے کی سیاست کے بجائے مستقبل کو مدنظر رکھ کر تعمیر و ترقی اور خوشحالی کے لیے اقدامات اٹھائیں گے۔ گزشتہ دور حکومت میں راجہ فاروق حیدر خان کا این ٹی ایس کا اقدام اچھا تھا لیکن سابق وزیراعظم جاتے جاتے ساڑھے چار ہزار لوگوں کو مستقل کر کے اپنے اچھے اقدام پر پانی پھیر دیا، جعلی بھرتیوں سمیت سابق دور کی بہت ساری خرابیاں ورثے میں ملی ہیں جنھیں درست کرنے کیلئے کام کر رہے ہیں۔

بلدیاتی انتخابات حکومت کی اولین ترجیح ہیں ایک سال کے اندر اقتدار کو نچلی سطح پر منتقل کرینگے، گراس روٹ لیول کا سیاسی کارکن ہوں، عام آدمی کی مشکلات سے واقف ہوں، عوام کی توقعات پر پورا اترنے کیلئے کوئی کسر روا نہیں رکھیں گے، مسئلہ کشمیر، ریاستی تشخص اور مملکت پاکستان کے وقار پر کوئی آنچ نہیں آنے دونگا۔ ان خیالات کا اظہار انھوں نے یہاں جموں وکشمیر ہاوس اسلام آباد میں کشمیر جرنلسٹس فورم کے وفد سے بات چیت کے دوران کیا۔ وفد کی قیادت فورم کے صدر زاہد اکبر عباسی کر رہے تھے، وفد میں فورم کے سیکرٹری جنرل سردار عقیل انجم، سیکرٹری فنانس راجہ ماجد افسر، جوائنٹ سیکرٹری عابد ہاشمی، چیف آرگنائزر اعجاز خان، سیکرٹری اطلاعات اقبال اعوان، ممبر گورننگ باڈی راجہ خالد شامل تھے۔ اس موقع پر اے کے این ایس کے صدر سردار زاہد تبسم بھی موجود تھے۔

وزیراعظم سردار عبدالقیوم نیازی نے کہا کہ میڈیا ہماری رہنمائی کرے اور درست سمت نشاندہی کرے ہم ہر مثبت تنقید اور مشورے کا احترام کرینگے۔ وزیراعظم نے کہا کہ خطے کو رول ماڈل بنانے کیلئے کوشاں ہوں جبکہ صدر ریاست بیرسٹر سلطان مسئلہ کشمیر اجاگر کر کے تحریک آزادی کشمیر کے مشن پر گامزن ہیں۔ صدر،وزیراعظم سمیت حکومت و ریاست کے تمام شعبے متحد ہیں اور ہم سب ملکر وزیراعظم پاکستان عمران خان کے ویژن کو آگے بڑھا رہے ہیں۔ وزیراعظم نے کہا کہ گڈ گورننس اور تحریک آزادی کے بعد خطے کی تعمیر و ترقی ترجیح ہے۔ آزاد کشمیر میں انفراسٹرکچر کی بہتری لا کر سیاحت کو فروغ دینگے، خطے کی تمام شاہرات بہتر کرینگے۔ میرا تعلق کنٹرول لائن کے حلقہ سے ایل او سی پر آباد لوگوں کی مشکلات سے بخوبی آگاہ ہوں، کنٹرول لائن سے ملحقہ تمام حلقوں کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کیے جائیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

Protected with IP Blacklist CloudIP Blacklist Cloud