مانسہرہ میں قیامت صغریٰ کا منظر، 5 مکانات تباہ، 14 افراد لقمہ اجل بن گئے

مانسہرہ(اے ایف بی) صوبہ خیبرپختونخوا کے ضلع مانسہرہ میں طوفانی بارشوں نے تباہی مچا دی، آسمانی بجلی گرنے سے پانچ مکانات زمین بوس ہوگئے جس کے نتیجے میں چودہ افراد جاں بحق اور کئی زخمی ہوئے ہیں۔تفصیلات کے مطابق مانسہرہ کے علاقے تورغر میں قدرتی آفت نے نظام زندگی درہم برہم کردیا، مقامی افراد نے اپنی مدد آپ کے تحت ملبے سے گیارہ لاشیں نکال لیں جبکہ دیگر تین کی تلاش کے لیے امدادی کارروائیاں جاری ہیں، وزیراعلیٰ کی ہدایت پر ایم پی اے محمد خان، ڈپٹی کمشنر کے ہمراہ موقع پر پہنچ گئے۔

آسمانی بجلی نے پانچ گھروں کو صفحہ ہستی سے مٹادیا، خواتین اور بچوں سمیت 14 افراد لقمہ اجل بنے، پہاڑوں پر قائم گھروں اور پتھریلے علاقوں سے اہل علاقہ نے اپنی مدد آپ کے تحت گیارہ لاشیں نکال لی ہیں۔حادثہ کی خبر اے آر وائی پر نشر ہونے کے بعد وزیر اعلیٰ خیبر پختونخواہ محمود خان نے مشینری اور امدادی ٹیموں کو موقع پر پہنچنے کی ہدایت کردی۔دوسری جانب سوات اور گردونواح میں زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے ہیں۔زلزلہ پیما مرکز کا کہنا ہے کہ زلزلے کی شدت4.3 جبکہ گہرائی143کلومیٹر ریکارڈ کی گئی، زلزلے کا مرکز کوہ ہندوکش کاپہاڑی سلسلہ تھا۔ شہریوں میں خوف وہراس پایا جاتا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

Protected with IP Blacklist CloudIP Blacklist Cloud