وسیلہ تعلیم پروگرام کا دائرہ کار ہائیر سکینڈری ایجوکیشن تک بڑھا دیا گیا

اسلام آباد(اے ایف بی ) حکومت نے وسیلہ تعلیم پروگرام کے دائرہ کار کو پرائمری ایجوکیشن سے بڑھا کر سکینڈری و ہائیر سکینڈری ایجوکیشن تک کردیا ہے۔ وزارت سماجی تحفظ و تخفیف غربت نے احساس وسیلہ تعلیم پروگرام میں رواں مالی سال کے دوران مزید 17 لاکھ 50 ہزار طالب علموں کا شامل کرنے کا ہدف مقرر کیا گیا ہے، پروگرام میں پرائمری کلاس کے 10 لاکھ، سیکنڈری کے 5 لاکھ جبکہ ہائیر سکینڈری کے 2 لاکھ 25 ہزار طالب علموں کو شامل کیا جائے گا۔ رواں مالی سال کی پہلی سہ ماہی کی تکمیل پر سیکنڈری و ہائیر سیکنڈری کلاس کے طالب علموں کو تعلیمی وظائف ملنا شروع ہوجائیں گے۔

سرکاری دستاویز کے مطابق وسیلہ تعلیم پروگرام کے تحت پرائمری کلاس کے بچوں کو فی سہ ماہی 1500 جبکہ بچیوں کو 2000 روہے دیئے جارہے ہیں۔ اب اس پروگرام کے تحت سکینڈری کلاس کے بچوں کو فی سہ ماہی 2500 جبکہ بچیوں کو 3000 روہے دیئے جائیں گے۔ ہائیر سکینڈری کلاس کے بچوں کو فی سہ ماہی 3500 جبکہ بچیوں کو 4000 روہے دئے جائیں گے۔ پانچویں جماعت پاس کرنے پر بچیوں کو 3000 روپے اضافی رقم بھی دئے جائیں گے۔دستاویز کے مطابق وسیلہ تعلیم پروگرام کے آغاز سے اب تک 44 لاکھ 50 ہزار طالب علموں کی انرولمنٹ کی گئی ہے اور انہیں اب تک مجموعی طور پر 19 ارب روپے تعلیمی وظائف کی مد میں تقسیم کئے جاچکے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

Protected with IP Blacklist CloudIP Blacklist Cloud