اکثرصبح نیند سے جاگنے پر طبیعت بوجھل اورموڈ کیوں خراب ہوتا ہے؟

یشتر لوگ نیند سے اٹھنے کے بعد موڈ میں کچھ تبدیلیاں محسوس کرتے ہیں، مثال کے طور پر اداسی، مایوسی، غصہ، انتہائی کاہلی وغیرہ لیکن کیا یہ معاملہ صرف سستی اور چڑچڑے پن کی حد تک محدود ہے یا پھر کوئی عارضہ ہے۔حتیٰ کہ بستر سے اٹھ کر بیت الخلاء تک جانے کا فاصلہ طے کرنا بھی طبیعت پر گزراں گرتا ہے، ایسا کیوں ہوتا ہے ؟طبی ماہرین کے مطابق عموماً ایسے لوگ جو صبح موڈ کی خرابی محسوس کرتے ہیں وہ وقت گزرنے کے ساتھ دن میں بہتر ہوجاتے ہیں اور ان کی حالت صبح جیسی نہیں رہتی۔ایسے افراد بغیر کسی وجہ کے موڈ کی خرابی محسوس کرتے ہیں، یہ ان کے مزاج کا حصہ بن جاتا ہے جس کا کوئی واضح سبب نہیں ہوتا۔طبی ماہرین نے صبح کے وقت افسردگی کی کوئی ایک خاص وجہ نہیں بتائی لیکن افسردگی کی مختلف وجوہات ہیں اور ہارمونل عوامل علامات کے وقت پر اثرانداز ہوسکتے ہیں۔ ہارمونل تبدیلیاں دن بھر ہوتی ہیں لیکن صبح کے وقت افسردگی کا ایک سبب ہوسکتی ہیں۔ تحقیق کے مطابق جب اندھیرا ہوتا ہے تو جسم میلاٹونن نامی ہارمون تیار کرتا ہےجس سے انسان کو بہت نیند آتی ہے اور کورٹیسول صبح کے وقت تناؤ اور افسردگی کا جواب دینے میں کردار ادا کرتا ہے۔ کسی شخص کے جسم میں عدم توازن، نیند کی مقدار اور روشنی کی نمائش مزاج میں تبدیلی کا باعث بن سکتی ہے۔

بیماریوں کے کنٹرول اور روک تھام کے مراکز (سی ڈی سی) کے مطابق صبح کے وقت افسردگی میں دیگر کچھ عوامل ہوسکتے ہیں، جن میں خاندانی یعنی موروثی بیماری، طبی مسئلہ، الکحل یا ایسی دوائیں جن میں الکحل ہو، ادویات کا استعمال کرنا، زندگی کے واقعات جیسے طلاق یا کوئی اور بڑا غم اور زندگی کے مشکل حالات وغیرہ شامل ہیں۔ صبح کے وقت افسردگی کا شکار افراد کواکثر ان علامات کا سامنا ہوتا ہے۔ صبح اٹھنے اور بستر سے باہر نکلنے میں دشواری، دن کے آغاز میں توانائی کی شدید کمی، نہانا یا کافی بنانا جیسے سادہ کام کرنے میں دشواری پیش آنا ۔اس کے علاوہ تاخیر سے جسمانی یا عملی کام کرنا، توجہ کی کمی یا توجہ کا فقدان، شدید اکتاہٹ یا مایوسی، ایسی سرگرمیوں میں دلچسپی کا فقدان جو کبھی ان کے لیے خوشگوار تھیں۔ماہرین صبح کے وقت افسردگی سے نکلنے کے لیے کچھ تجاویز دیتے ہیں۔ ماہرین کے مطابق ورزش کرنے کے علاوہ یہ بھی کہا گیا ہے کہ رات کو جلدی سونے کی عادت بنائیں اور دیر تک مت جاگیں، پوری طرح آرام کریں صورتحال زیادہ خراب ہونے پر کسی ماہر نفسیات سے لازمی مشورہ کریں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں

Protected with IP Blacklist CloudIP Blacklist Cloud