نواز شریف کوڈاکٹروں نے بہترین علاج کے لئے لندن میں قیام کا مشورہ دے دیا

لاہور(اے ایف بی)سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف کی تازہ ترین میڈیکل رپورٹس میں ڈاکٹروں نے بہترین علاج کے لیے نواز شریف کو لندن میں قیام کا مشورہ دے دیا۔ تفصیلات کے مطابق سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف کی تازہ ترین میڈیکل رپورٹس لاہور ہائیکورٹ میں جمع کرا دی گئیں، امجد پرویز ایڈوکیٹ نے نواز شریف کی چار صفحات پر مشتمل میڈیکل رپورٹ لاہور ہائیکورٹ میں جمع کرائی۔

رپورٹ کے مطابق ڈاکٹر نے نواز شریف کو بہترین علاج کے لیے لندن میں ہی قیام کا مشورہ دیا ہے اور کہا ہے کہ نواز شریف روٹین کی چہل قدمی اور میڈیکل تھیراپی جاری رکھیں۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ نواز شریف کے مطابق وہ پاکستان کی جیل میں تنہا قید تھے، ان کی حالت وہاں زیادہ خراب ہوئی، نواز شریف ہائی رسک کیٹیگری کے مریض ہیں اور ان کے دل کے علاج کے لیے تمام اقدامات اٹھانے کی ضرورت ہے۔

میڈیکل رپورٹ میں بتایا گیا کہ کورونا کی وجہ سے نواز شریف سمیت کئی مریضوں کے علاج میں خلل آیا ہے، ان کے دل کی شریانیں کھولنے کے لیے جلد ہی وقت مقرر کیا جائے گا اور نواز شریف کے پلیٹ لیٹس کا علاج ان کے دل کی بند شریانیں کھولنے کے بعد کیا جائے گا۔ خیال رہے لاہور ہای کورٹ کے حکم پر نواز شریف اس سے قبل بھی میڈیکل رپورٹس جمع کرا چکے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں