خواجہ سرا گل پانڑہ کے قتل میں ملوث ملزم گرفتار

پشاور(اے ایف بی) خیبر پختونخواہ کے دارالحکومت پشاور میں مقتول خواجہ سرا گل پانڑہ کے قتل میں ملوث ملزم کو گرفتار کرلیا گیا، دیگر ملزمان کی گرفتاری کے لیے ٹیم تشکیل دے دی گئی ہے۔ تفصیلات کے مطابق کیپٹل سٹی پولیس کا کہنا ہے کہ 9 ستمبر کو تہکال میں خواجہ سرا گل پانڑہ کے قتل میں ملوث ملزم کو گرفتار کرلیا گیا، واقعے میں ایک خواجہ سرا چاہت زخمی بھی ہوا تھا۔ پولیس کا کہنا ہے کہ دیگر ملزمان کی گرفتاری کے لیے ٹیم تشکیل دے دی گئی ہے، ایس پی سٹی اور اے ایس پی گلبہار کو فوکل پرسن مقرر کیا گیا ہے۔ دونوں خواجہ سراں سے ملاقات اور ان کے مسائل حل کریں گے۔

پولیس ذرائع کے مطابق کسی بھی خواجہ سرا کے خلاف جرم پر فوری ایف آئی آر رجسٹر کرنے کی ہدایت کی گئی ہے، خواجہ سراں پر تشدد یا دھمکانے میں ملوث افراد کی ہسٹڑی شیٹ بنانے کی بھی ہدایت کی گئی ہے۔ علاوہ ازیں گلبہار تھانے میں وکٹم سپورٹ ڈیسک خواجہ سراں کے لیے بھی کام کرے گا جبکہ پولیس موبائل ایپ میں بھی خواجہ سراں سے متعلق خصوصی فیچر شامل کیا جائے گا۔

خیال رہے کہ گل پانڑہ کا قتل 9 ستمبر کو پشاور میں فائرنگ سے ہوا تھا، فائرنگ سے اس کے ساتھ موجود ساتھی چاہت کو بھی زخمی کردیا گیا تھا۔ بعد ازاں پختونخواہ کے ایک اور شہر صوابی میں 19 سالہ خواجہ سرا کو اس کے بھائی نے ناچ گانے سے روکنے پر فائرنگ کر کے قتل کر دیا تھا۔ صدر خیبر پختونخواہ خواجہ سرا ایسوسی ایشن فرزانہ الیاس کا کہنا ہے کہ پچھلے 5 سال میں 1500 خواجہ سراں کو زیادتی کا نشانہ بنایا گیا جبکہ 68 کو قتل کر دیا گیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں